مرکزی صفحہ / Uncategorized / خواتین کو مردوں کی نسبت زیادہ نیند درکار ہوتی ہے

خواتین کو مردوں کی نسبت زیادہ نیند درکار ہوتی ہے

مردوں کے مقابلے میں خواتین کو زیادہ نییند درکار ہوتی ہے۔یہی وجہ ہے کہ صبح اٹھنے کے بعد خواتین میں مردوں کی نسبت چڑچڑا پن اور بد مزاجی زیادہ ہوتی ہے۔نارتھ کیرولائٹا یونیورسٹی کی ایک نئی تحقیق میں سامنے آئی ہے۔اگر آپ کی اہلیہ صبح انتہائی چڑ چڑی اور بد مزاج ہوں تو غصہ ہر گز نہ کریں کیونکہ یہ فطری عمل ہے۔تحقیق کے مطابق خواتین کو مردوں کی نسبت زیادہ نیند کی ضرورت ہوتی ہے اور عام طور پر ان کی یہ ضرورت پوری بھی نہیں ہو پاتی ۔جس کا نتیجہ ان کے مزاج میں چڑچڑے پن کی شکل میں سامنے آتا ہے۔تحقیق میں شوہروں کو مشورہ دیا گیا ہے کہ وہ اپنی بیویوں کو زیادہ سے زیادہ سونے کا موقع فراہم کریں تاکہ گھریلو ناچاقی سے حفاظت رہے۔تحقیق میں یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ اگر خواتین کو نیند پوری کرنے کے مواقع نہ دیے جائیں تو وہ مردوں کے مقابلے میں ذہنی اور جسمانی طور پر زیادہ متاثر ہوتی ہیں بلکہ ان میں امراض قلب،مایوسی اور نفسیاتی مسائل پیدا ہونے کا خدشہ ہوتا ہے۔محقق ڈاکٹر پیروس کے مطابق ہم نے صبح کے اوقات میں خواتین کو زیادہ غصے اور بد مزاجی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پایا ہے،جس کی وجہ نیند کا پورا نہ ہونا ہے۔

اپنے بارےمیں حکیم نیاز احمد ڈیال

Check Also

کورونا وائرس:بزرگ ہی سب سے زیادہ متاثر کیوں ہوتے ہیں؟

بڑھاپا بذات خود ایک بہت بڑی بیماری ہے جو انسان کو بے شمار مسائل کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے